140

ایبٹ آباد : نرسوں کا احتجاج جاری، صوبائی اسمبلی کے باہر دھرنے کی دھمکی

خیبر پختون خوا نرسنگ آلائنس نے مطالبات کی منظوری کے لئے اسمبلی کے باہر احتجاجی دھرنے کی دھمکی دیدی ہے، بے نظیر شہید ڈسٹرکٹ ہسپتال ایبٹ آباد میں نو روز سے نرسز کا مطالبات کی منظوری کے لئے احتجاج جاری ہے،اس حوالہ سے ڈپٹی چیئر پرسن نرسنگ الائنس ایبٹ آباد کوثر اسماعیل کاکہنا تھا صوبائی حکومت کو 10نکاتی ایجنڈہ دیا ہے اگر اس پر عمل نہ ہواتو 30مارچ کوصوبہ بھر کی نرسسز اسمبلی کے بائر دھرنا دیں گی جس کی زمہ داری حکومت پر ہوگی، احتجاجی کیمپ میں میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے ڈپٹی چیئر پرسن کوثر اسماعیل کاکہنا تھا نرسسز کے مطالبات میں سروس سٹرکچر ،پروموشن ،ایم ٹی آئی نرسز کی مستقلی ،نئی بھرتیوں ،نرسسز کے لئے الگ ڈائریکٹوریٹ کا قیام ،الگ کیڈر کی تقسیم کے علاوہ ہیلتھ آلاونس کی منصفانہ ادائیگی،ضلع سطح پر کمیٹیوں میں نرسسز کی نمائندگی ،اینڑنشپ کی نشستوں میں اضافہ ،نرسسز کو محدود پریکٹس کی اجازت اور غیر نرسسز کو نرسسز کے کام سے روکنے سمیت میٹرنٹی،مڈیکل اور عدت کی چھٹیوں میں کٹوتی نہ کرنے کے مطالبات شامل ہیں ،انہوں نے اس بات پر زور دیا کہ صوبائی حکومت انصاف کے نام پر وجود میں آئی ہے وہ صوبہ بھر کی نرسسز کے جائز مطالبات کو دھرنا دیئے بغیر منظور کرے بصورت دیگر پر امن احتجاج کے بعد اپنے حق کے لئے تمام لائحہ عمل زیر غور ہیں۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں